تعلیم سے متعلق ایک سوال نامہ کا جواب

مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

(ماہنامہ ’عزم نو‘ لاہور کی طرف ملک کے نظام تعلیم کے حوالے سے ایک سوال نامہ مشاہیر اہل علم کو بھیجا گیا اور ان کی طرف سے موصولہ جواب ماہنامہ ’عزم نو‘ کے تعلیم نمبر میں شائع کیے گئے۔ یہ سوال نامہ اور حضرت مولانا محمد سرفراز خان صفدر رحمہ اللہ کا تحریر کردہ جواب یہاں درج کیا جا رہا ہے۔)


سوال نامہ

۱۔ آپ کے نزدیک موجودہ تعلیمی پس ماندگی اور روز افزوں اخلاقی ترقی ومعاشرتی انحطاط کے کیا اسباب ہیں؟

۲۔ آخر کیا وجہ ہے کہ آزادی حاصل کیے تیس برس گزر جانے کے باوجود ہم اپنا قومی وملی تشخص اجاگر کرنے میں ناکام رہے ہیں؟

۳۔ موجودہ نظام تعلیم بدل کر اسلامی نظام تعلیم کیسے نافذ ہوگا؟ آپ کے نزدیک اس کا خاکہ کیا ہوگا، خصوصاً سائنسی اور فنی علوم کو کس طرح اسلامی قالب میں ڈھالا جائے گا؟

۴۔ کیا یہ صحیح نہیں کہ طلبہ کی ایک کثیر تعداد انگریزی زبان کی وجہ سے ناکام رہتی ہے۔ آخر انگریزی زبان کی بالادستی ختم ہو کر اردو کو کب اس کا صحیح مقام ملے گا؟

حضرت شیخ الحدیثؒ کا جواب

الیٰ محترم المقام جناب مہربان منظور احمد صاحب دام مجدہم

وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ ۔ مزاج گرامی؟

آپ کا محبت نامہ تو کافی دنوں سے موصول ہو چکا ہے۔ آپ کی کرم فرمائی، حسن ظنی اور ذرہ نوازی کا صمیم قلب سے ہزار شکریہ، مگر عدیم الفرصت ہونے کی وجہ سے جواب نہ دیا جا سکا۔ پرسوں ۱۱؍ رجب ۱۳۹۸ھ،/۱۸؍ جون ۱۹۷۸ء کو بخاری شریف ختم ہوئی ہے۔ کل دور دراز سے آئے ہوئے مہمانوں کی وجہ سے مصروفیت رہی۔ آج خدا خدا کر کے کچھ تھوڑا سا وقت سرسری جواب دینے اور یوں سمجھیے کہ صرف آپ کے حکم کی تعمیل کے لیے بمشکل نکالا ہے۔ اس لیے آپ کے قائم کردہ سوالات کے نہایت ہی اختصار کے ساتھ جوابات بلکہ اشارات درج ذیل ہیں۔ واللہ الموفق۔

نمبر ۱۔ راقم اثیم کے نزدیک موجودہ تعلیمی پس ماندگی کے کئی اسباب ہیں:

۱۔ خود اساتذہ کرام کی، بجاے محنت ومشقت اور دیانت کے ساتھ تعلیم وتدریس کے صرف تنخواہ اور ٹیوشن پر نظر۔

۲۔ طلبہ میں ٹھوس طریقہ سے تعلیم حاصل کرنے کے شوق وذوق کا فقدان۔

۳۔ صرف اپنی نصابی تعلیم حاصل کرنے کی بجائے غیر ضروری سیاست میں حصہ لینا۔

۴۔ اور مادر پدر آزاد سوسائٹی اور مجلس کو اپنانا۔

۵۔ حب الدنیا کی وجہ سے اس کے درپے ہونا کہ تعلیم حاصل ہو یا نہ ہو، علمی استعداد وقابلیت اجاگر ہو یا نہ ہو، جلدی سے سند اور ڈپلوما حاصل ہو جائے، گو ناجائز طریقہ ہی سے کیوں نہ ہو تاکہ رقم بٹورنے کی سبیل بہت جلد سامنے آ جائے وغیرہ وغیرہ۔

اور معاشرتی واخلاقی انحطاط کے اسباب بھی متعدد ہیں، مثلاً:

(۱) جنسی بے راہ روی کی فحش فلمیں، ٹی وی پروگرام، جذبات میں ہیجان پیدا کرنے والے ناول اور وہ اخباری مضامین جن کو لکھنے والے مزے لے لے کر لکھتے ہیں اور نوجوان طبقے کے اخلاق شعوری وغیر شعوری طور پر بگڑتے ہیں۔

(۲) کلب گھر، مینا بازار اور بین الاقوامی سطح پر ثقافت کے نام پر ناچوں اور ناچیوں کے تبادلے اور ان کی تشہیر۔

(۳) کالجوں میں مختلط تعلیم جو جذبات کو برباد کرنے کا پہلا اور موثر قدم ہے۔

(۴) دینی تعلیم سے بے گانگی اور دوری بلکہ بعض کے نزدیک بڑی حد تک اس سے تنفر وغیرہ ایسے اسباب ہیں جن سے اخلاقی اور معاشرتی برائیاں قوم کی جڑوں تک پہنچ چکی ہیں جن سے عالم اسباب میں رستگاری مشکل ہے۔

نمبر ۲۔ ہم نے جس مقصد کے لیے قربانیاں دی تھیں اور جس سنہرے مطلب کے لیے یہ ملک بنایا تھا کہ اس میں قرآن وسنت کی بطرز حضرات خلفاے راشدینؓ حکومت قائم کی جائے گی، آج تک حکومت کی سطح پر نیک نیتی سے اس کی طرف بالکل توجہ نہیں دی گئی۔ اگر اسلام کا عادلانہ نظام نافذ ہو جاتا اور اس کی برکات عوام دیکھ لیتے تو آج ہم اتنے ذلیل نہ ہوتے جتنے ہو گئے ہیں۔ ملک دو ٹکڑے ہو گیا ہے اور باطل پرستوں کو اپنے خالص کافرا نہ اور ملحدانہ نظریات پھیلانے کا بڑا موقع مل گیا ہے جو پاکستان کے ہر محکمہ میں افراط کے ساتھ گھسے ہوئے ہیں اور دھیرے دھیرے اپنے جراثیم پھیلا رہے ہیں اور ان کے مقابلہ میں قوم کی اصلاح صرف چیونٹی کی چال چل رہی ہے اور وہ بھی صرف زبانی نہ کہ عملی۔ اندریں حالات قومی اور ملی تشخص کیونکر اور کیسے اجاگر ہو؟ بقول علامہ اقبال مرحوم ؂

خدا نے آج تک اس قوم کی حالت نہیں بدلی

نہ ہو جس کو خیال آپ اپنی حالت کے بدلنے کا

نمبر ۳۔ موجودہ فرنگی نظام تعلیم کو، جو لارڈ میکالے کا ورثہ ہے، بدلنا ناممکن تو نہیں لیکن جب تک اس کی تعلیم کے پیدا کردہ کل پرزے موجود ہیں، مشکل ضرور ہے۔ اگر ملک کے اندر برسر اقتدار طبقہ سچے دل سے اسلامی نظام تعلیم نافذ کرنا چاہے اور اپنے غلط کار مشیروں کی رائے پر نہ چلے تو تھوڑے سے عرصے میں یہ نافذ ہو سکتا ہے۔ جب تک تعلیم کے تمام شعبوں پر تفصیلی طور پر نگاہ نہ ڈالی جائے اور ان کا مواد اکٹھا نہ کر لیا جائے، صرف چلتے چلتے خاکہ تیار نہیں ہو سکتا۔ یہ چیز ذرا محنت طلب ہے، لیکن یہ بات تو ممکن ہے کہ قرآن کریم کا ترجمہ، حدیث شریف کی بعض کتابیں، فقہ اسلامی کی بعض کتابیں اور حضرات صحابہ کرامؓ کے حالات پر مشتمل بعض ٹھوس تاریخی کتابیں نصاب کے طو رپر سکولوں سے لے کر کالجوں تک درجہ بدرجہ حسب لیاقت طلبہ لازم قرار دی جائیں۔ راقم اثیم کے نزدیک سائنس اور فنی علوم کسی اسلامی قاعدہ سے متصادم نہیں، جبکہ ان کا مصرف صحیح ہو۔ لہٰذا ان کو اسلامی قالب میں ڈھالنے کی ضرورت ہی نہیں ہے۔ ہاں، جب ان کا مصرف ہی غلط ہو کہ گانے بجانے اور فحش حرکات اور ڈراموں کو ہی مقصد زیست بنا لیا جائے تو پھر معاملہ جدا ہے۔ ضرورت اپنے ڈھالنے کی ہے نہ کہ ان کو۔

نمبر ۴۔ ناکامی کے اسباب صرف انگریزی زبان ہی نہیں، اور بھی کئی اسباب ہیں۔ ایک یہ غیر ملکی زبان بھی ہو تو اس میں کیا اشکال ہے؟ لیکن معاف رکھنا، جب تک لارڈ میکالے کی یہ روحانی نسل، جن کی گھٹی میں انگریزی زبان داخل ہے، ختم نہیں ہو جاتی، اس وقت تک یہ زبان بھی نہیں جائے گی۔ اردو کو اس کا صحیح مقام صرف اس وقت حاصل ہوگا جب خدا خوف قسم کا حکمران طبقہ جس کی زبان اور دل ایک ہو، اس کو صدق دل سے نافذ کرے، ورنہ ع

خواب تھا جو کچھ کہ دیکھا جو سنا افسانہ تھا

دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ ہمارے ملک کو صحیح معنی میں پاکستان بنائے اور اس میں عادلانہ نظام نافذ ہو اور ہم اپنی گنہگار آنکھوں سے اس کی برکات دیکھیں، مگر افسوس کہ ؂

مجھ کو منزل نصیب ہو نہ سکی

رہنماؤں سے میں نے پوچھا بھی

مشاہدات و تاثرات

جولائی تا ستمبر ۲۰۰۹ء

جلد ۲۰ ۔ شمارہ ۷ تا ۱۰

گر قبول افتد زہے عز و شرف
محمد عمار خان ناصر

ہم نے تمام عمر گزاری ہے اس طرح (۱)
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

ہم نے تمام عمر گزاری ہے اس طرح (۲)
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

حضرت شیخ الحدیثؒ کے اساتذہ کا اجمالی تعارف
مولانا محمد یوسف

امام اہل سنتؒ کے چند اساتذہ کا تذکرہ
مولانا قاضی نثار احمد

گکھڑ میں امام اہل سنت کے معمولات و مصروفیات
قاری حماد الزہراوی

امام اہل سنت رحمۃ اللہ علیہ کا تدریسی ذوق اور خدمات
مولانا عبد القدوس خان قارن

امام اہل سنت رحمہ اللہ کی قرآنی خدمات اور تفسیری ذوق
مولانا محمد یوسف

امام اہل سنت رحمہ اللہ کی تصانیف: ایک اجمالی تعارف
مولانا عبد الحق خان بشیر

امام اہل سنتؒ کی تصانیف اکابر علما کی نظر میں
حافظ عبد الرشید

حضرت شیخ الحدیث رحمہ اللہ اور دفاعِ حدیث
پروفیسر ڈاکٹر محمد اکرم ورک

منکرینِ حدیث کے شبہات کے جواب میں مولانا صفدر رحمہ اللہ کا اسلوبِ استدلال
ڈاکٹر محمد عبد اللہ صالح

’’مقام ابی حنیفہ‘‘ ۔ ایک علمی و تاریخی دستاویز
ڈاکٹر انوار احمد اعجاز

’’عیسائیت کا پس منظر‘‘ ۔ ایک مطالعہ
ڈاکٹر خواجہ حامد بن جمیل

حضرت شیخ الحدیث رحمہ اللہ کی تصانیف میں تصوف و سلوک کے بعض مباحث
حافظ محمد سلیمان

سنت اور بدعت ’’راہ سنت‘‘ کی روشنی میں
پروفیسر عبد الواحد سجاد

مولانا محمد سرفراز خان صفدر رحمہ اللہ کا انداز تحقیق
ڈاکٹر محفوظ احمد

مولانا محمد سرفراز خان صفدر کا اسلوب تحریر
نوید الحسن

امام اہل سنت رحمہ اللہ کا شعری ذوق
مولانا مومن خان عثمانی

حضرت والد محترمؒ سے وابستہ چند یادیں
مولانا ابوعمار زاہد الراشدی

شمع روشن بجھ گئی بزم سخن ماتم میں ہے
قاضی محمد رویس خان ایوبی

والد محترم کے ساتھ ایک ماہ جیل میں
مولانا عبد الحق خان بشیر

پیکر علم و تقویٰ
مولانا شیخ رشید الحق خان عابد

دو مثالی بھائی
مولانا حاجی محمد فیاض خان سواتی

حضرت والد محترمؒ کے آخری ایام
مولانا عزیز الرحمٰن خان شاہد

میرے بابا جان
ام عمران شہید

ذَہَبَ الَّذِیْنَ یُعَاشُ فِیْ اَکْنَافِہِمْ
اہلیہ قاری خبیب

اب جن کے دیکھنے کو اکھیاں ترستیاں ہیں
ام عمار راشدی

ابا جیؒ اور صوفی صاحبؒ ۔ شخصیت اور فکر و مزاج کے چند نمایاں نقوش
محمد عمار خان ناصر

قبولیت کا مقام
مولانا محمد عرباض خان سواتی

جامع الصفات شخصیت
مولانا قاری محمد ابوبکر صدیق

ایک استاد کے دو شاگرد
حافظ ممتاز الحسن خدامی

داداجان رحمہ اللہ ۔ چند یادیں، چند باتیں
حافظ سرفراز حسن خان حمزہ

کچھ یادیں، کچھ باتیں
حافظ محمد علم الدین خان ابوہریرہ

اٹھا سائبان شفقت
حافظ شمس الدین خان طلحہ

ملنے کے نہیں نایاب ہیں ہم
ام عفان خان

نانا جان علیہ الرحمہ کی چند یادیں
ام ریان ظہیر

میرے دادا جی رحمۃ اللہ علیہ
ام حذیفہ خان سواتی

میرے شفیق نانا جان
ام عدی خان سواتی

وہ سب ہیں چل بسے جنہیں عادت تھی مسکرانے کی
بنت قاری خبیب احمد عمر

بھولے گا نہیں ہم کو کبھی ان کا بچھڑنا
بنت حافظ محمد شفیق (۱)

دل سے نزدیک آنکھوں سے اوجھل
اخت داؤد نوید

مرنے والے مرتے ہیں لیکن فنا ہوتے نہیں
بنت حافظ محمد شفیق (۲)

شیخ الکل حضرت مولانا سرفراز صاحب صفدرؒ
مولانا مفتی محمد تقی عثمانی

نہ حسنش غایتے دارد نہ سعدی را سخن پایاں
مولانا مفتی محمد عیسی گورمانی

امام اہل سنت کی رحلت
مولانا محمد عیسٰی منصوری

امام اہلِ سنتؒ کے غیر معمولی اوصاف و کمالات
مولانا سعید احمد جلالپوری

حضرت مولانا محمد سرفراز خاں صفدرؒ کا سانحۂ ارتحال
مولانا مفتی محمد زاہد

علم و عمل کے سرفراز
مولانا سید عطاء المہیمن بخاری

اک شمع رہ گئی تھی سو وہ بھی خموش ہے
مولانا محمد جمال فیض آبادی

چند منتشر یادیں
مولانا محمد اسلم شیخوپوری

اک چراغ اور بجھا اور بڑھی تاریکی
پروفیسر غلام رسول عدیم

چند یادگار ملاقاتیں
پروفیسر ڈاکٹر علی اصغر چشتی

امام اہل سنتؒ: چند یادیں، چند تأثرات
حافظ نثار احمد الحسینی

ایک عہد ساز شخصیت
پروفیسر ڈاکٹر حافظ محمود اختر

پروانے جل رہے ہیں اور شمع بجھ گئی ہے
مولانا ظفر احمد قاسم

وما کان قیس ہلکہ ہلک واحد
حضرت مولانا عبد القیوم حقانی

ہم یتیم ہوگئے ہیں
مولانا محمد احمد لدھیانوی

میرے مہربان مولانا سرفراز خان صفدرؒ
ڈاکٹر حافظ محمد شریف

مثالی انسان
مولانا ملک عبد الواحد

وہ جسے دیکھ کر خدا یاد آئے
مولانا داؤد احمد میواتی

دو مثالی بھائی
مولانا گلزار احمد آزاد

امام اہل سنت رحمۃ اللہ علیہ چند یادیں
مولانا محمد نواز بلوچ

میرے مشفق اور مہربان مرشد
حاجی لقمان اللہ میر

مت سہل ہمیں جانو
ڈاکٹر فضل الرحمٰن

حضرت مولانا سرفراز صفدرؒ اور مفتی محمد جمیل خان شہیدؒ
مفتی خالد محمود

شیخ کاملؒ
مولانا محمد ایوب صفدر

اولئک آبائی فجئنی بمثلھم
مولانا عبد القیوم طاہر

چند یادیں اور تاثرات
مولانا مشتاق احمد

باتیں ان کی یاد رہیں گی
صوفی محمد عالم

یادوں کے گہرے نقوش
مولانا شمس الحق مشتاق

علمائے حق کے ترجمان
مولانا سید کفایت بخاری

دینی تعلق کی ابتدا تو ہے مگر انتہا نہیں
قاری محمد اظہر عثمان

امام اہل سنت مولانا سرفراز خان صفدر
مولانا الطاف الرحمٰن

امام اہل سنتؒ اور ان کا پیغام
حافظ محمد عامر جاوید

ایک شخص جو لاکھوں کو یتیم کر گیا
مولانا عبد اللطیف قاسم چلاسی

تفسیر میں امام اہل سنتؒ کی بصیرت : ایک دلچسپ خواب
ڈاکٹر محمد حبیب اللہ قاضی

امام اہل سنتؒ ۔ چند ملاقاتیں
حافظ تنویر احمد شریفی

مجھے بھی فخر ہے شاگردئ داغِؔ سخن داں کا
ادارہ

سماحۃ الشیخ سرفراز خان صفدر علیہ الرّحمۃ ۔ حیاتہ و جہودہ الدینیۃ العلمیّۃ
ڈاکٹر عبد الماجد ندیم

امام اہل السنۃ المحدث الکبیر ۔ محمد سرفراز خان صفدر رحمہ اللہ
ڈاکٹر عبد الرزاق اسکندر

العلامۃ المحدث الفقیہ الشیخ محمد سرفراز خان صفدر رحمہ اللہ
ڈاکٹر محمد اکرم ندوی

محدث العصر، الداعیۃ الکبیر الشیخ محمد سرفراز صفدر رحمہ اللہ
مولانا طارق جمیل

امام اہل سنتؒ کے عقائد و نظریات ۔ تحقیق اور اصول تحقیق کے آئینہ میں
مولانا عبد الحق خان بشیر

حضرت شیخ الحدیث رحمہ اللہ کا منہج فکر اور اس سے وابستگی کے معیارات اور حدود
محمد عمار خان ناصر

درس تفسیر حضرت مولانا سرفراز خان صفدر ۔ سورۂ بنی اسرائیل (آیات ۱ تا ۲۲)
محمد عمار خان ناصر

حضرات شیخین کی چند مجالس کا تذکرہ
سید مشتاق علی شاہ

خطبہ جمعۃ المبارک حضرت مولانا سرفراز خان صفدرؒ
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

امام اہل سنت رحمہ اللہ کے دلچسپ واقعات
مولانا محمد فاروق جالندھری

حفظ قرآن اور دورۂ حدیث مکمل کرنے والے طلبہ سے امام اہل سنتؒ کا ایک ایمان افروز تربیتی خطاب
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

تعلیم سے متعلق ایک سوال نامہ کا جواب
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

امام اہل سنتؒ کی فارسی تحریر کا ایک نمونہ
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

امام اہل سنتؒ کے منتخب مکاتیب
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

ہمارے پیر و مرشد
محمد جمیل خان

امام اہل سنت کے چند واقعات
سید انصار اللہ شیرازی

تعزیتی پیغامات اور تاثرات ۔ بسلسلہ وفات حضرت مولانا سرفراز خان صفدرؒ
ادارہ

حضرت شیخ الحدیثؒ کی وفات پر اظہار تعزیت کرنے والے مذہبی و سیاسی راہ نماؤں کے اسمائے گرامی
ادارہ

مسئلہ حیات النبی صلی اللہ علیہ وسلم اور متوازن رویہ
مولانا ابوعمار زاہد الراشدی

امام اہل سنتؒ کے علمی مقام اور خدمات کے بارے میں حضرت مولانا محمد حسین نیلویؒ کی رائے گرامی
ادارہ

امام اہل سنت رحمہ اللہ کا دینی فکر ۔ چند منتخب افادات
مولانا محمد سرفراز خان صفدرؒ

حضرت مولانا سرفراز خان صفدرؒ ۔ شجرۂ نسب سلسلہ نقشبندیہ مجددیہ
ادارہ

سلسلہ نقشبندیہ میں حضرت شیخ الحدیثؒ کے خلفاء
ادارہ

آہ! اب رخصت ہوا وہ اہل سنت کا امام
محمد عمار خان ناصر

اے سرفراز صفدر!
مولوی اسامہ سرسری

ان کو ڈھونڈے گا اب تو کہاں راشدی
مولانا ابوعمار زاہد الراشدی

امام اہل سنت قدس سرہ
مولانا غلام مصطفٰی قاسمی

حضرت مولانا سرفراز خان صفدرؒ کی یاد میں
مولانا منظور احمد نعمانی

مضی البحران صوفی و صفدر
حافظ فضل الہادی

علم کی دنیا میں تو ہے سربلند و سرفراز
ادارہ

قصیدۃ الترحیب
ادارہ

خطیب حق بیان و راست بازے
محمد رمضان راتھر